Urdu Blog: Fasih Ahmed & those who defended him.

ہم خاصے مڈل کلاس ہیں۔ یہ بات پہلے ہی بتلا دینا چاہتے ہیں تاکہ قارئین اس پورے بلاگ میں ہم سے مڈل کلاسیوں والی امیدیں ہی وابستہ رکھیں۔ چادر بچھا کے کھانا کھانا۔ ریموٹ کنٹرول پہ پلاسٹک کی پنی۔ اور اپنے پرانے کپڑے دوسری کزن کو دینا اور تیسری کزن کے کپڑے خود پہن لینا۔ عیدی پہ جھگڑا کرنا اور دال میں زیادہ پانی ڈال دینا تاکہ زیادہ لوگ کھانا کھا سکیں – ہماری تربیت اور یادیں ایسی ہی ہیں۔ ہم آج بھی پرانے ڈبے سنبھال کے رکھتے ہیں اور اگلے دن کی بریانی شدید چسکے لے کے کھاتے ہیں۔

The rest of the article can be found here

http://www.humsub.com.pk/101475/mahwash-ajaz-21/

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

w

Connecting to %s